نریندر مودی کے دوبارہ اقتدار میں آنے سے کشمیریوں پر دباؤ بڑھے گا،مشاہد حسین سید

اسلام آباد (ہم صفیر نیوز) پاکستان مسلم لیگ (ن)کے سینیٹر مشاہد حسین سید نے کہاہے کہ نریندر مودی کے دوبارہ اقتدار میں آنے سے کشمیریوں پر دباؤ بڑھے گا، مسئلہ کشمیر اور مسئلہ فلسطین کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جائے۔جمعرات کو سینیٹر مشاہدحسین سید نے مسئلہ فلسطین کے حل سے متعلق سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ فلسطین، کشمیر اور روہنگیا کے مسائل ہمارے لیے بہت اہم ہیں،ہم فلسطین، کشمیر اور روہنگیا کے حوالے سے پی کے آر فورم تشکیل دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ قائداعظم نے کشمیر کو پاکستان کی شہہ رگ قرار دیا،کشمیر کے حوالے سے ہماری یہی پالیسی ہے۔انہوں نے کہاکہ کشمیر کے حوالے سے ہماری پالیسی بہت واضح ہے،انہوں نے کہاکہ سید فخر امام کا کشمیر کمیٹی کا چیئرمین بننا خوش آئند ہے۔ انہوں نے کہاکہ نریندر مودی کے دوبارہ اقتدار میں آنے سے کشمیریوں پر دباؤ بڑے گا۔انہوں نے کہاکہ کشمیر کی جدوجہد آزادی کو بھی تقویت ملے گی۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان مسئلہ فلسطین کی بھرپور حمایت کرتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ مسئلہ کشمیر اور مسئلہ فلسطین کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جائے۔سینیٹر لیفٹیننٹ جنرل (ر)عبد القیوم نے کہاکہ مسلم اْمّہ کے مسائل کے حل کے لیے مسلم امہ کا اتحاد ضروری ہے۔ فرحت اللہ بابر نے کہاکہ یوم القدس کے حوالے سے تقریب کا اہتمام خوش آئند ہے۔ انہوں نے کہاکہ نیتن یاہو پانچویں بار اسرائیل کا وزیراعظم بنا ہے۔ فرحت اللہ بابر نے کہاکہ امریکی صدر اگلے ماہ مڈل ایسٹ پلان کا اعلان کر رہے ہیں۔ فرحت اللہ بابرنے کہاکہ امریکی بحری بیڑہ خلیج میں آچکا ہے جس سے کشیدگی بڑھ رہی ہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.