بہترین باؤلر رہ چکا ہوں، ویرات کوہلی

نئی دہلی (ہم صفیر نیو ز)بھارتی کپتان ویرات کوہلی نے انکشاف کیا ہے کہ وہ ایک بہترین باؤلر بھی رہ چکے ہیں مگر کمر کی درد کی وجہ سے اب باؤلنگ نہیں کر سکتے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق کوہلی نے حال ہی میں انکشاف کیا ہے کہ ا?خری مرتبہ اْنہوں نے2017 میں سری لنکا کے خلاف ون ڈے میچ میں بال کرائی تھی۔ اْنہوں نے بتایا کہ ہم تقریباً میچ جیت چکے تھے، میں نے کپتان ایم ایس دھونی سے پوچھا کہ میں گیند کر کروا سکتا ہوں؟انہوں نے بتایا کہ میں بس گیند کروانے کے لیے اپنی بازؤں کو بل دے رہا تھا تو باؤنڈری کے پاس کھڑے جیسپریت بمراہ نے چلاتے ہوئے کہا کہ ”اس وقت مذاق نہیں، یہ انٹر نیشنل میچ ہے۔“ویرات نے بتایا کہ ٹیم میں کسی کو بھی مجھ پر اعتماد نہیں تھا کہ میں باؤلنگ کر سکتا ہوں، مگر میں نے باؤلنگ کی۔اس کے بعد میری کمر میں شدید درد کے باعث میں نے باؤلنگ چھوڑ دی اور پھر کبھی نہیں کروائی۔بھارتی کپتان نے بتایا کہ وہ انگلینڈ کے کھلاڑی جیمز انڈریسن کا باؤلنگ ایکشن کو فالو کرتے ہیں۔ویرات کوہلی نے کہا کہ اگرمیری ٹیم میری باؤلنگ کی صلاحیتوں پر اعتماد کرتی تو میری انٹر نیشنل وکٹیں 8 سے بھی زیادہ ہو سکتی تھیں۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.