• April 1, 2020

سلطنت نیازیہ صوبائی خود مختاری کی دھجیاں اڑا رہی ہے،پلوشہ خان

اسلام آباد(ہم صفیر نیوز )پاکستان پیپلز پارٹی کی مرکزی ڈپٹی سیکریٹری اطلاعات پلوشہ خان نے آئی جی سندھ پولیس کلیم امام کی طرف سے چیف الیکشن کمشنر کو خط لکھ کر عمر کوٹ کے ایس پی اور ڈی سی کے تبادلے کے مطالبے پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بلی تھیلے سے باہر آگئی ہے اور کلیم امام پی ٹی آئی کے عمر کوٹ کے ضلعی صدر کے فرائض انجام دے رہے ہیں جس کی وجہ سے ان کا سیاسی کردار کھل کر سامنے آگیا ہے۔ پلوشہ خان نے کہا کہ سلطنت نیازیہ آئی جی سندھ کو بطور وائس رائے استعمال کرکے صوبائی خود مختاری کی دھجیاں اڑا رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ حیرت کی بات یہ ہے کہ آئی جی سندھ پولیس منتخب نمائندوں کی کھلی کچہری کا بھی نوٹس لینے لگے ہیں۔ آئی جی سندھ کو کس نے یہ اختیار دیا ہے کہ وہ منتخب نمائندوں کے کھلی کچہریوں کا نوٹس لیں۔ یہ سروس ایکٹ کی کھلی خلاف ورزی ہے جس پر آئی جی سندھ کے خلاف محکمانہ کارروائی ہونی چاہیے۔ پلوشہ خان نے کہا کہ آئی جی سندھ پولیس کے متعلق حکومت سندھ کے خدشات درست ثابت ہو رہے ہیں کہ آئی جی سندھ کی تمام تر توجہ پی ٹی آئی کے مفادات تک محدود ہے اور سندھ میں امن و عامہ کا معاملہ ان کی ترجیحات میں نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ میں عوام کی منتخب حکومت ہے۔ وفاق سندھ میں بے جا مداخلت کرکے سندھ کے عوام کے مینڈیٹ کی توہین بند کرے۔ پلوشہ خان نے کہا کہ سلیکٹڈ حکومت صوبائی خود مختاری کی دھجیاں اڑا کر آئین سے انحراف کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی جی سندھ کا سیاسی کردار سامنے آنے کے بعد یا تو آئی جی سندھ کو وفاق واپس بلائے یا کلیم امام سرکاری ملازمت چھوڑ کر باقاعدہ پی ٹی آئی میں شامل ہو جائیں۔

Read Previous

نیب سے مقدمات ختم کرانے کیلئے 100کرپٹ افراد نے درخواستیں دیدیں

Read Next

ہنگورجہ: رٹائرڈ فوجی نے فائرنگ کر کے رٹائرڈ فوجی کو ہی قتل کر دیا

%d bloggers like this: